واپس چلیں   پاکستان کی آواز > اردو ادب اورشاعری > شعر و شاعری



شعر و شاعری شعر و شاعری


میں ایسی محبت کرتا ہوں - تم کیسی محبت کرتی ہو

Like Tree1Likes
  • 1 Post By wajee

short url
جواب
 
LinkBack موضوع کے اختیارات موضوع کی درجہ بندی ظاہری انداز
پرانا 30-09-09, 12:23 PM   #1
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Sep 2008
مراسلات: 7,698
کمائي: 93,572
شکریہ: 5,512
5,173 مراسلہ میں 11,801 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default میں ایسی محبت کرتا ہوں - تم کیسی محبت کرتی ہو

میں ایسی محبت کرتا ہوں - تم کیسی محبت کرتی ہو




تم جہاں بھی بیٹھ کہ جاتی ہو
جس چیز کو ہاتھ لگاتی ہو
میں وہیں پہ بیٹھا رہتا ہوں
اس چیز کو چھوتا رہتا ہوں
میں ایسی محبت کرتا ہوں
تم کیسی محبت کرتی ہو

تم جن سے ہنس کر ملتی ہو
میں ان کو دوست بناتا ہوں
تم جس رستے پر چلتی ہو
میں اس سے آتا جاتا ہوں
تم جن کو دیکھتی رہتی ہو
وہ خواب سرہانے رکھتا ہوں
میں تم سے ملنے جلنے کے
کتنے کی بہانے رکھتا ہوں
کچھ خواب سجا کر آنکھوں میں
پلکوں سے موتی چنتا ہوں
کوئی لمس اگر چھو جائے تو
میں پہروں اس کو سوچتا ہوں
میں ایسی محبت کرتا ہوں
تم کیسی محبت کرتی ہو

جن لوگوں میں تم رہتی ہو
تم جن سے باتیں کرتی ہو
جو تم کو اچھے لگتے ہیں
وہ مجھ کو اچھے لگتے ہیں

جس باغ میں صبح کو جاتی ہو
جس سبزے پر تم چلتی ہو
جو شاخ تمہیں چھو جاتی ہے
جو خوشبو تم کو بھاتی ہے
وہ اوس تمہارے چہرے پر
جو قطرہ قطرہ گرتی ہے
وہ تتلیاں چھوڑ کے پھولوں کو
جو تم سے ملنے آتی ہیں
ان سب کے نازک جذبوں میں
میرے دل کی دھڑکن بستی ہے
تم پاس رہو یا دور رہو
نظروں کے سامنے رہتی ہو
میں تم کو تکتا رہتا ہوں
میں تم کو سوچتا رہتا ہوں
میں ایسی محبت کرتا ہوں
تم کیسی محبت کرتی ہو

ہر موقع پر ہر منظر میں
میں ساتھ تمہارے رہتا ہوں
میں چشم تصور میں اکثر
بس تم کو دیکھتا رہتا ہوں
بس تم کو سوچتا رہتا ہوں
میں ایسی محبت کرتا ہوں
تم کیسی محبت کرتی ہو
زارا likes this.
__________________
بے مقصد زندگی تاریک مستقبل
wajee آف لائن ہے   Reply With Quote
3 قاری/قارئین نے wajee کا شکریہ ادا کیا
مرزا محمد فاروق (30-09-09), شاہ جی 90 (02-10-09), غلام خان (24-02-11)
کمائي نے wajee کو اس مراسلے کے لئے دیئے
تاریخ رکن عطیہ کرنے کی وجہ رقم
30-09-09 مرزا محمد فاروق دستیاب نہیں 50
پرانا 30-09-09, 12:31 PM   #2
Senior Member
 
مرزا محمد فاروق's Avatar
 
تاریخ شمولیت: May 2009
مقام: lalamusa
مراسلات: 2,378
کمائي: 28,322
شکریہ: 6,060
1,819 مراسلہ میں 3,813 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

بہت خوبصورت لکھا ہے وقاص آپ نے
مرزا محمد فاروق آف لائن ہے   Reply With Quote
2 قاری/قارئین نے مرزا محمد فاروق کا شکریہ ادا کیا
شاہ جی 90 (02-10-09), غلام خان (24-02-11)
پرانا 01-10-09, 06:06 PM   #3
Senior Member
 
The Great's Avatar
 
تاریخ شمولیت: Jun 2007
مقام: لوگوں کے دل میں
عمر: 21
مراسلات: 5,774
کمائي: 84,450
شکریہ: 2
2,038 مراسلہ میں 3,296 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

واہ بھائی مزہ آگیا پڑ کر جناب۔
The Great آف لائن ہے   Reply With Quote
2 قاری/قارئین نے The Great کا شکریہ ادا کیا
شاہ جی 90 (02-10-09), عروج (24-01-11)
پرانا 01-10-09, 08:16 PM   #4
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Sep 2008
مراسلات: 1,307
کمائي: 38,489
شکریہ: 245
1,036 مراسلہ میں 3,136 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

سلام
یہ میری فیوریئٹ میں سے ایک ھے بہت سنا ھے
آپ بھی سنو

YouTube - ♥ TuM KeSii MoHabbat KeRte Ho ♥
Haya 786 آف لائن ہے   Reply With Quote
3 قاری/قارئین نے Haya 786 کا شکریہ ادا کیا
شاہ جی 90 (02-10-09), عروج (24-01-11), غلام خان (24-02-11)
پرانا 01-10-09, 08:59 PM   #5
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Sep 2008
مراسلات: 1,307
کمائي: 38,489
شکریہ: 245
1,036 مراسلہ میں 3,136 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

اس وقت میں یہ سن رھی ھوں
لکھتے ھوئے غزلیں سنتی ھوں

YouTube - TERI SOORAT NIGAHON MEIN - MUNNI BEGUM
Haya 786 آف لائن ہے   Reply With Quote
3 قاری/قارئین نے Haya 786 کا شکریہ ادا کیا
شاہ جی 90 (02-10-09), عروج (24-01-11), غلام خان (24-02-11)
پرانا 01-10-09, 10:48 PM   #6
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Apr 2009
مراسلات: 1,445
کمائي: 27,299
شکریہ: 2,789
964 مراسلہ میں 1,975 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

واہ بھائی مزہ آگیا پڑ کر جناب۔
عامرشہزاد آف لائن ہے   Reply With Quote
عامرشہزاد کا شکریہ ادا کیا گیا
شاہ جی 90 (02-10-09)
پرانا 02-10-09, 12:09 AM   #7
Senior Member
 
شاہ جی 90's Avatar
 
تاریخ شمولیت: Feb 2009
مقام: اٹک سٹی
عمر: 38
مراسلات: 4,844
کمائي: 99,041
شکریہ: 22,162
4,089 مراسلہ میں 10,838 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

اس نظم کو خواتین کی جانب سے سیپ پیش کر چکی ہیں اچھی نظم ہے

سیپ کی نظم یہاں دیکھہ سکتے ہیں
میں ایسی محبت کرتی ہوں

اور ہم نے اس کا جواب بھی لکھا تھا وہ بھی ابھی حاضر کئیے دیتے ہیں

Last edited by شاہ جی 90; 02-10-09 at 12:37 AM.
شاہ جی 90 آف لائن ہے   Reply With Quote
شاہ جی 90 کا شکریہ ادا کیا گیا
غلام خان (24-02-11)
پرانا 02-10-09, 12:39 AM   #8
Senior Member
 
شاہ جی 90's Avatar
 
تاریخ شمولیت: Feb 2009
مقام: اٹک سٹی
عمر: 38
مراسلات: 4,844
کمائي: 99,041
شکریہ: 22,162
4,089 مراسلہ میں 10,838 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

ہمارا جواب تھا
تم جس دن ہم سے بات کرو
دیوانوں کی مانند پہروں پھر
ہم خود سے باتیں کرتے ہیں

تم جس رستے سے گزر چلو
ہم دیر تلک اس رستے پر
خاموش سے بیٹھے رہتے ہیں‌

تم جس دن ہم سے روٹھہ چلو
اس دن چاہے کوئی بات نہ ہو
ہم رات گئے تک گلیوں میں
گم سم سے پھرتے رہتے ہیں

پھر چپکے سے رو دیتے ہیں
تم دیکھہ لو میری آنکھوں میں
کیا پیار نظر نہیں آتا ہے

پاگل جو رہے تیری خاطر
دیوانہ علی کہلاتا ہ
ے
میں ایسی محبت کرتا ہوں
تم کیسی محبت کرتی ہو
شاہ جی 90 آف لائن ہے   Reply With Quote
2 قاری/قارئین نے شاہ جی 90 کا شکریہ ادا کیا
عبداللہ آدم (28-02-11), غلام خان (24-02-11)
پرانا 24-02-11, 12:00 PM   #9
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Aug 2010
مراسلات: 615
کمائي: 9,044
شکریہ: 2,476
390 مراسلہ میں 926 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

شاہ جی بہت خوب

موفقیین انشاءاللہ
غلام خان آف لائن ہے   Reply With Quote
پرانا 24-02-11, 12:01 PM   #10
Senior Member
 
تاریخ شمولیت: Aug 2010
مراسلات: 615
کمائي: 9,044
شکریہ: 2,476
390 مراسلہ میں 926 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

نہ کٹتي ہم سے شب جدائي کي
کتين ہي طاقت آزمائي کي

رشک دشمن بہانہ تھا سچ ہے
ميں نے ہي تم سے بے وفائي کي

کيوں برا کہتے ہو بھلا نا صح
مين نے حضرت سے کيا برائي کي

دام عاشق ہے دل دہي نہ ستم
دل کو چھينا تو دل رہائي کي

گر نہ بگڑو تو کيا بگڑتا ہے
مجھ ميں طاقت نہيں لڑائي کي

گھر تو اس ماہ وش کا دور نہ تھا
ليکن طالع نے نار سائي کي

دل ہوا خوں خيال ناخن يار
تو نے اچھي گرہ کشائي کي

مومن آئو تمہيں بھي دکھلا دوں
سير بت خانے ميں خدئي کي
...........................................



ميں نے تم کو دل ديا، تم نے مجھے رسوا کيا
ميں نے تم سے کي کيا، اور تم نے مجھے سے کيا کيا

کشتہ ناز بتاں روز ازل سے ہوں مجھے
جان کھونے کے لئے اللہ نے پيدا کيا

روز کہتا تھا کہيں مرتا نہيں ہم مر گئے
اب تو خوش ہو بے وفا تيرا ہي لے کہنا گيا

سر سے شعلے اٹھتے ہيں آنکھوں سے دريا جاري ہے
شمع سے يہ کس نے ذکر اس محفل آرا کا کيا

کيا خجل ہوں اب علا ج بے قراري کيا کروں
دھر ديا ہاتھ اس نے دل پر تو بھي دھڑکا کيا

عرض ايماں سے ضد اس غارت گر ديں کو بڑھي
تجھ سے اے مومن خدا سمجھے يہ تو نے کيا کيا
-----------------------------------

جلتا ہوں ہجر شاہد و ياد شراب ميں
شوق ثواب نے مجھے ڈال عذاب ميں

کہتے ہيں تم کو ہوش نہيں اضطراب ميں
سارے گلے تمام ہوئے اک جواب ميں

رہتے ہيں جمع کوچہ جاناں ميں خاص و عام
آباد ايک گھر ہے جہاں خراب ميں

بد نام ميرے گر يہ رسوا سے ہو چکے
اب عذر کيا رہا نگہ بے حجاب ميں

ناکاميوں سے کامک رہا عمر بھر ہميں
پري ميں ياس ہے جو ہوس تھي شباب ميں

دونوں کا ايک حال ہے يہ مدعا ہو کاش
وہ ہي خط اس نے بھيج ديا کيوں جواب ميں

تقدير بھي بري مري تدبير بھي بري
بگڑے وہ پر سش سبب اجتناب ميں

کيا جلوے ياد آئے کہ اپني خبر نہيں
بے بادہ مست ہوں ميں شب ماہ تاب ميں

پيہم سجود پائے صنم پر دم و داع
مومن خدا کو بھول گئے اضطراب ميں
---------------------------------------------


ہر غنچہ لب سے عشق کا اظہار ہے غلط
اس مبحث صحيح کي تکرار ہے غلط

کہنا پڑا درست کہ اتنا رہے لحاظ
ہر چند وصل غير کا انکار ہے غلط

کر تے ہيں مجھ سے دعوي الفت وہ کيا کريں
کيونکر کہيں مقولہ اغيار ہے غلط

يہ گرم جوشياں تري گو دل سے ہوں ولے
تاثير نالہ ہائے شرر بار ہے غلط

کرتے ہو مجھ سے راز کي باتين تم اس طرح
گويا کہ قول محرم اسرار ہے غلط

اٹھ جا کہا تلک کوئي باتيں اٹھائے گا
نا صح تو خود غلط تري گفتار ہے غلط

سچ تو يہ ہے کہ اس بت کافر کے دور ميں
لاف و گزاف مومن ديندار ہے غلط
---------------------------------------------


دل ميں اس شوخ کے جو راہ نہ کي
ہم نے بھي جان دي پر آہ نہ کي

تھا بہت شوق وصل تو نے تو
کمي اے حسن تاب کاہ نہ کي

ميں بھي کچھ خوش نہيں وفا کر کے
تم نے اچھا کيا نباہ نہ کي

محتسب يہ ستم غريبوں پر
کبھي تنبيہ بادشاہ نہ کي

گريہ و آہ بے اثر دونوں
کس نے کشتي مري تباہ نہ کي

تھا مقدر ميں اس سے کم ملنا
کيوں ملاقات گاہ گاہ نہ کي

ديکھ دشمن کو اٹھ گيا بے ديد
ميرے احوال پر نگاہ نہ کي

مومن اس ذہن بے خطا پر حيف
فکر آمرزش گناہ نہ کي
-----------------------------------------


دکھاتے آئينہ ہو اور مجھ ميں جان نہيں
کہو گے پھر بھي کہ ميں تجھ سا بد گمان نہيں

ترے فراق ميں آرام ايک آن ہيں
يہ ہم سمجھ چکے گر تو نہيں تو جان نہيں

نہ پوچھو کچھ مرا احوال مري جاں مجھ سے
يہ ديکھ لو کہ مجھے طاقت بيان نہيں

يہ گل ہيں داغ جگر کے انہيںں سمجھ کر چھيڑ
يہ باغ سينہ عاشك گلستان نہيں

شب فراق ميں پہنچي نہ دل سے جان تلک
کہيں اجل بھي تو مجھ سي ہي ناتوان نہيں

وہ حال پوچھے ہے ميں چشم سرمگيں کو ديکھ
يہ چپ ہوا ہوں کہ گويا مري زبان نہيں

نکل کے دير سے مسجد ميں جا رہ اے مومن
خدا کا گھر تو ہے تيرے اگر مکان نہيں
----------------------------------------


محشر ميں پاس کيوں دمِ فرياد آگيا
رحم اس نے کب کيا تھا کہ اب ياد آگيا

الجھا ہے پاؤں يار کا زلفِ دراز ميں
لو آپ اپنے دام ميں‌ صيّاد آگيا

ناکاميوں ميں تم نے جو تشبيہ مجھ سے دي
شيريں کو درد تلخيِ فرہاد آگيا

ہم چارہ گر کو يوں ہي پہنائيں گے بيڑياں
قابو ميں اپنے گر وہ پري زاد آگيا

دل کو قلق ہے ترکِ محبت کے بعد بھي
اب آسماں کو شيوہء بے داد آگيا

وہ بدگماں ہوا جو کبھي شعر ميں مرے
ذکرِ بتانِ خلخ و نوشاد آگيا

تھے بے گناہ جراءتِ پابوس تھي ضرور
کيا کرتے وہم خجلتِ جلاد آگيا

جب ہوچکا يقيں کہ نہيں طاقتِ وصال
دم ميں ہمارے وہ ستم ايجاد آگيا

ذکرِ شراب و حور کلامِ خدا ميں ديکھ
مومن ميں کيا کہوں مجھے کيا ياد آگيا
--------------------------------------------


ہم جان فدا کرتے ، گر وعدہ وفا ہوتا
مرنا ہي مقدر تھا ، وہ آتے تو کيا ہوتا

ايک ايک ادا سو سو، ديتي ہے جواب اسکے
کيونکر لبِ قاصد سے، پيغام ادا ہوتا

اچھي ہے وفا مجھ سے، جلتے ہيں جليں دشمن
تم آج ہُوا سمجھو، جو روزِ جزا ہوتا

جنّت کي ہوس واعظ ، بے جا ہے کہ عاشق ہوں
ہاں سير ميں جي لگتا، گر دل نہ لگا ہوتا

اس تلخيِ حسرت پر، کيا چاشنيِ الفت
کب ہم کو فلک ديتا، گر غم ميں مزا ہوتا

تھے کوسنے يا گالي، طعنوں کا جواب آخر
لب تک غمِ غير آتا، گر دل ميں بھرا ہوتا

ہے صلح عدو بے خط، تھي جنگ غلط فہمي
جيتا ہے تو آفت ہے، مرتا تو بلا ہوتا

ہونا تھا وصال اک شب، قسمت ميں بلا سے گر
تُو مجھ سے خفا ہوتا، ميں تجھ سے خفا ہوتا

ہے بے خودي دايم، کيا شکوہ تغافل کا
جب ميں نہ ہوا اپنا، کيونکر وہ مرا ہوتا

اس بخت پہ کوشش سے، تھکنے کے سوا حاصل
گر چار? غم کرتا، رنج اور سوا ہوتا

اچھي مري بدنامي تھي يا تري رُسوائي
گر چھوڑ نہ ديتا، ميں پامالِ جفا ہوتا

ديوانے کے ہاتھ آيا کب بندِ قبا اُس کا
ناخن جو نہ بڑھ جاتے، تو عقدہ يہ وا ہوتا

ہم بندگئي بت سے ہوتے نہ کبھي کافر
ہر جاے گر اے مومن موجود خدا ہوتا
غلام خان آف لائن ہے   Reply With Quote
پرانا 24-02-11, 12:08 PM   #11
Banned
 
تاریخ شمولیت: Jan 2009
مقام: اللہ کی زمین
عمر: 26
مراسلات: 10,810
کمائي: 306,792
شکریہ: 1,712
7,026 مراسلہ میں 16,077 بارشکریہ ادا کیا گیا
Default

السلام علیکم

اچھی شاعری ہے۔
زارا آف لائن ہے   Reply With Quote
زارا کا شکریہ ادا کیا گیا
غلام خان (24-02-11)
جواب

Tags
color, com, feature, magenta, گمان, پاگل, وش, نظر, موقع, محبت, مسجد, آج, انشاءاللہ, بھائی, جواب, خواتین, خدا, دوست, دل, رات, شاہ, علی, عشق, غزلیں, صبح


Currently Active Users Viewing This Thread: 1 (0 members and 1 guests)
 
موضوع کے اختیارات
ظاہری انداز Rate This Thread
Rate This Thread:


Similar Threads
موضوع موضوع شروع کیا فورم جوابات آخری مراسلہ
میں ایسی محبت کرتی ہوں#2 سیپ شاعری اور مصوری 46 25-01-11 08:06 PM
میں ایسی محبت کرتی ہوں#1 سیپ سیدہ ثوبیہ ناز 11 09-10-09 11:50 AM
میں ایسی محبت کرتی ہوں#5 سیپ شاعری اور مصوری 9 29-10-08 12:14 PM
میں ایسی محبت کرتی ہوں#4 سیپ شاعری اور مصوری 4 14-10-08 04:06 PM
میں ایسی محبت کرتی ہوں#3 سیپ شاعری اور مصوری 2 14-10-08 02:33 PM


تمام اوقات پاکستانی معیاری وقت ( +5 GMT) کے لحاظ سے ہیں۔ ابھی وقت ہے 05:57 AM

cpanel hosting 

Powered by vBulletin® Copyright ©2000 - 2014, Jelsoft Enterprises Ltd.
Content Relevant URLs by vBSEO
جملہ حقوق نشرو اشاعت ©2000 - 2014,پاکستان کی آواز - پاکستان کے فورمزکی انتظامیہ کے پاس مخفوظ ہیں۔ ہم اردو ترجمے کے لیے جناب زبیرکے مشکور ہیں-
اپنا بلاگ مفت حاصل کریں wordpress.pk
ہم pak.net ڈومین نیم کے لیے جناب فاروق سرور خان کے مشکور ہیں
vBCredits v1.4 Copyright ©2007 - 2008, PixelFX Studios
Ad Management plugin by RedTyger